94

نفرت بے لگام ہو تو روکنا مشکل ہوتا ہے: صدر مملکت کی نیوزی لینڈ حملے کی مذمت

صدر مملکت عارف علوی نے نیوزی لینڈ میں کرائسٹ چرچ کی مسجد میں قتل عام پر مذمت کرتے ہوئے کہا کہ متاثرہ خاندانوں سے تعزیت کا اظہار کرتا ہوں۔ مشکل وقت ہے، نفرت بے لگام ہو تو روکنا مشکل ہوتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق صدر مملکت عارف علوی نے نیوزی لینڈ میں کرائسٹ چرچ کی مسجد میں قتل عام پر اظہار افسوس کرتے ہوئے کہا کہ میری ہمدردیاں اور دعائیں متاثرین کے ساتھ ہیں۔

صدر مملکت نے کہا کہ متاثرہ خاندانوں سے تعزیت کا اظہار کرتا ہوں۔ مشکل وقت ہے، نفرت بے لگام ہو تو روکنا مشکل ہوتا ہے۔

خیال رہے کہ آج صبح نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ میں 2 مساجد میں مسلح افراد کی جانب سے فائرنگ کی گئی، حملے میں اب تک 40 افراد جاں بحق ہوگئے ہیں، حملہ آوروں نے النور مسجد اور لین وڈ میں نماز جمع کے دوران نمازیوں کو نشانہ بنایا۔

بنگلہ دیشی کرکٹ ٹیم بھی حملے کے وقت مسجد میں موجود تھی تاہم وہ محفوظ رہی۔

وزیر اعظم نیوزی لینڈ جیسنڈا آرڈرن نے فائرنگ واقعے کے بعد ہنگامی پریس کانفرنس کرتے ہوئے دہشت گرد حملے کی مذمت کی اور کہا کہ آج نیوزی لینڈ کی تاریخ کا سیاہ ترین دن ہے، ملزم سے تحقیقات جاری ہیں۔

واقعے کے بعد وزیر اعظم عمران خان نے بھی دہشت گرد حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ حملے کا شدید صدمہ ہے، حملے سے واضح ہوگیا دہشت گردی کا کوئی مذہب نہیں۔

انہوں نے کہا تھا کہ دہشت گردی کے بڑھتے واقعات کی ذمہ داری نائن الیون کے بعد اسلام مخالف پروپیگنڈے پر عائد ہوتی ہے، جس میں کسی بھی دہشت گردی کا الزام اسلام اور سوا ارب مسلمانوں پر لگادیا جاتا ہے، یہ سب جان بوجھ مسلمانوں کی جائز سیاسی جدوجہد کو دبانے کے لیے کیا گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں