110

نیوزی لینڈ کی مسجد میں نمازیوں پر فائرنگ کرنے والے حملہ آور کی تصویر اور نام سامنے آ گیا

نیوزی لینڈ کی دو مساجد میں آج ایک حملہ آور نے نمازیوں پر فائرنگ کر دی جس کے نتیجے میں 20 سے زائد افراد کے شہید ہونے کی اطلاعات ہیں تاہم ایک حملہ آور نے قتل و غارت کو سوشل میڈیا پر براہ راست دکھانے کی کوشش بھی کی ۔

غیر ملکی ویب سائٹ ” ڈیلی میل “ نے اپنی رپورٹ میں دعویٰ کیا ہے کہ ایک دہشتگردی نے النور مسجد کے اندر سے فائرنگ کرتے ہوئے لائیو سٹریمنگ بھی کی ، یہ واقع دوپہر ڈیڑھ بجے پیش آیا جس وقت جمعہ کی نما ز کی ادائیگی کا وقت ہو رہا تھا ۔ ایک حملہ آور نے خود کو ٹویٹر پر ” برینٹن ٹرینٹ “ ظاہر کیا ہے اور اپنا تعلق آک لینڈ کے قریبی علاقے گرفٹن سے بتایا ہے ۔

سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی فوٹیج میں حملہ آور نے سیمی آٹو میٹک گن کا استعمال کرتے ہوئے نماز کیلئے آنے والے افراد پر فائرنگ کر دی جس کے باعث بڑی تعداد میں شہری شہید ہو گئے ہیں تاہم اس موقع پر لوگوں نے وہاں سے بھاگنے کی بھی کوشش کی لیکن اس درندہ صف شخص نے ان پر بھی گولیاں چلائیں ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں