93

خانہ کعبہ کے ساتھ سیلفیاں لینے پر پابندی

حرمین شریفین میں سیلفیوں پر پابندی، خلاف ورزی پر تادیبی کارروائی ہوگی

جدہ (26 نومبر 2017)وزارت خارجہ نے مملکت میں تمام سفارتخانوں کو ہدایت کی ہے کہ وہ اپنے شہریوں کو حرمین میں تصویر کشی سے باز رکھیں۔

اس ضمن میں وزارت خارجہ نے سعودی وزارت حج و عمرہ کی طرف سے جاری کئے جانے والے نوٹیفکیشن کا حوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ مملکت آنے والے معتمرین اور عازمین حج کو اس بات سے آگاہ کردیا جائے کہ وہ حرمین میں اپنے موبائل یا کیمروں سے سیلفیاں اور تصاویر نہ بنائیں۔ خلاف ورزی کرنے والے افراد کیخلاف قانونی کارروائی کی جائے گی۔

انڈونیشی اخبار نے اس حوالے سے خبر شائع کرتے ہوئے کہا ہے کہ انڈونیشی وزارت مذہبی امور کی جانب سے تمام عمرہ ٹور آپریٹرز کو سرکلر جاری کردیئے گئے ہیں تاکہ وہ اپنے زیر انتظام آنے والے معتمرین و عازمین کو اس بارے میں آگاہ کردیں کہ کسی بھی صورت میں حرمین میں تصویر کشی نہ کی جائے۔

دریں اثناء مقامی ذرائع کے مطابق وزارت حج کی جانب سے جاری کئے گئے سرکلر میں اس امر کی نشاندہی کی گئی ہے کہ مختلف ممالک سے آنے والے معتمرین اور حجاج حرمین شریفین میں اپنا زیادہ وقت تصویر کشی میں ضائع کرتے ہیں جس سے ان کی اور دوسروں کی عبادت میں خلل پڑتا ہے۔ یہ لوگ حرمین میں تصویریں بناکر انہیں سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کردیتے ہیں۔

وزارت کی جانب سے جاری کردہ سرکلر میں مزید کہا گیا ہے کہ ایسے معتمرین اور حجاج کرام جو اپنے موبائل فون، کیمرے یا وڈیو کیمروں کے ذریعے حرمین شریفین کے اندر یا باہر تصاویر بنائیں گے ان کے آلات ضبط بھی کئے جاسکتے ہیں۔

اس ضمن میں متعلقہ اداروں کو بھی ہدایات جاری کردی گئی ہیں کہ وہ اس امر کو یقینی بنائیں کہ کوئی معتمر یا حاجی حرمین میں تصویر کشی نہ کرسکے۔ 

اپنا تبصرہ بھیجیں