102

پاکستان کی سلامتی کو اپنی کی سلامتی سمجھتے ہیں، ایران

تہران(07 نومبر 2017 ) آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ سے ایران کے وزیر دفاع بریگیڈیئر جنرل عامر حاتمی نے ملاقات کی، جس میں خطے کی سیکیورٹی صورتحال ،دوطرفہ تعلقات بارڈر مینجمنٹپر تبادلہ خیال کیا گیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ تین روز سرکاری دورے پر ایران گئے ہوئے ہیں۔ آرمی چیف کا ایران پہنچنے پروالہانہ استقبال کیا گیا۔آرمی چیف سے ایرانی فوج کے چیف آف سٹاف سمیت اعلیٰ حکام نے ملاقاتیں کیں۔

آج آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے ایرانی وزیر دفاع بریگیڈیئر جنرل عامر حاتمی نے ملاقات کی ہے۔ اس موقع پرجنرل عامرحاتمی کا کہنا تھا کہ علاقائی ممالک کی سالمیت اورخود مختاری ایران کی خارجہ پالیسی کا مستقل حصہ ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کی سلامتی کو اپنی سلامتی کی طرح سمجھتے ہیں۔

ایرانی وزیر دفاع نے آرمی چیف کے دورہ کو سکیورٹی اور استحکام کیلئے موثرقرار دیاہے۔ خطے میں امن وامان کے قیام میں پاکستان کی دفاعی اور عسکری کامیابیوں کی حمایت کرتے ہیں۔ بریگیڈیئر جنرل عامرنے کہا کہ دونوں ممالک ملکر افغانستان میں امن واستحکام قائم کرسکتے ہیں۔

ایرانی وزیر دفاع نے بین الاقوامی سازشوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہاکہ افغانستان اور عراق پر حملوں، شام اور عراق میں شدت پسند تنظیم داعش کو بنانے اور یمن میں جنگ شروع کر کے امریکا اور اسرائیل خطے کے ٹکڑے کر کے تذبذب کی کیفیت پیدا کرنا چاہتا ہے۔ایسی صورتحال خطے اوراسلام کیلئے مفید نہیں ہے۔

آرمی چیف جنرل قمر جاوید نے پاکستان اور ایران برادر ہمسایہ ممالک ہیں۔دونوں ممالک کی ثقافتی اور مذہبی اقدار بھی مشترک ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں