41

تعلیمی اداروں میں سافٹ ڈرنکس پر پابندی

پنجاب بھر کے تعلیمی اداروں میں آج سے کولا اور انرجی ڈرنکس کے خلاف سخت آپریشن کا آغاز ہو گا، پنجاب فوڈ اتھارٹی کی طرف سے دی گئی ڈیڈ لائن ختم ہو چکی ہے۔

چودہ اگست سے صوبہ بھر کے تعلیمی اداروں میں کولا اور انرجی ڈرنکس کی فروخت پر مکمل پابندی عائد کر دی گئی ہے۔

ڈی جی فوڈ اتھارٹی نورالامین مینگل کا کہنا ہے کہ خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی، تمام کمپنیوں کو بھی اسکولوں میں سپلائی نہ دینے کے نوٹس جاری کیے جا چکے ہیں۔ ایسا کرنے والی کمپنی کے خلاف بھی سخت کارروائی ہوگی۔

نورالامین مینگل کا کہنا تھا کہ سافٹ ڈرنک کی پابندی حفاظتی تدابیر کے تحت لگائی گئی ہے کیونکہ ترقی یافتہ ممالک امریکا، سعودی عرب، دبئی اور مختلف عرب ریاستوں کے تعلیمی اداروں میں سافٹ ڈرنک کی فروخت پر مکمل پابندی ہے کیونکہ اس سے طالب علموں کی صحت شدید متاثر ہونے کا خدشہ ہوتا ہے۔

پنجاب فوڈ اتھارٹی کے سربراہ نے کہا تھا کہ صوبے کے تمام اسکولوں میں کھانے پینے کی اشیاء سے متعلق ضابطہ اخلاق بنایا جارہا ہے اس کے تحت اشیاء کو بالترتیب لال ، زرد اور ہرا رنگ دیا جائے گا، لال رنگ کی اشیاء پر مکمل پابندی ہوگی اور سافٹ ڈرنک سمیت دیگر اشیاء کا شمار بھی اسی میں کیا جائے گا جبکہ زرد اور ہری اشیاء کی فروخت منظوری کے بعد فروخت کی اجازت دی جائے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں