100

شیخ رشید مشیر اطلاعات کو ’فردوس عاشق صاحب‘ کہہ گئے

آج کل سیاستدانوں میں ’ صاحب ‘ اور ’ صاحبہ ‘ یعنی مذکر اور مونث کی بحث جاری ہے اور اس بحث کا آغاز اس وقت ہوا جب وزیراعظم عمران خان نے جلسے سے خطاب کے دوران بلاول بھٹو زرداری کو ’ صاحبہ ‘ کہہ کر مخاطب کیا ۔

تفصیلات کے مطابق پیپلز پارٹی کی جانب سے بلاول بھٹو کیلئے یہ لفظ استعمال کرنے پر سخت رد عمل سامنے آرہاہے اور معافی کامطالبہ کیا جارہاہے تاہم اس پر بلاول بھٹو نے آج میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے عمران خان کو تنقید کا نشانہ بنایا ۔ اس سے قبل شیخ رشید نے پریس کانفرنس سے خطاب کیا اوروہ بھی مشیر اطلاعات فردوس عاشق اعوان کو ” صاحب “ کہہ گئے ۔ وفاقی وزیر ریلوے نے کہا کہ وزارت اطلاعات چلانا فردوس عاشق اعوان صاحب کا کام ہے کیونکہ وہ ایک زبردست منسٹر اور تجربہ کار ہیں ۔

صحافی نے گفتگو کے دوران شیخ رشید کو کہا کہ آپ کی زبان پھسل گئی ، آپ نے فردوس عاشق اعوان کو صاحبہ سے صاحب بنا دیاہے جس پر شیخ رشید نے کہا کہ نہیں ایسی بات تو میں نے نہیں کی پھر بھی آج کل صاحب اور صاحبہ کی لڑائی ہے ، فردوس عاشق اعوان زور دار خاتون ہیں ، وہ میری بات کو زیادہ محسوس نہیں کریں گی ۔ان کا کہناتھا کہ اسد عمر محنتی آدمی ہیں چاہتاہوں انہیں دوبارہ عمران خان کا بازو بنادوں۔شیخ رشید کاکہناتھا کہ بلاول آج کل چڑچڑا بنا ہوا ہے، اس نے چیکو جیسی شکل بنائی ہوئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں