73

آئی پی ایل بھارتی کھلاڑیوں کے لیے تباہی کا پیغام ہے:راجر بنی

آئی سی سی ورلڈ کپ2019ءمحض ایک مہینہ دور رہ گیا ہے اور اب انٹر نیشنل میچز بھی خال خال ہی ہورہے ہیں جس کے بعد اب آئی پی ایل کے میچز کھیلے جارہے ہیں، مسلسل میچز اور کھلاڑیوں پر بڑھتے بوجھ کو کرکٹ ماہرین اور مداحوں کی جانب سے بدترین قرار دیا جارہا ہے لیکن پیسوں کی ہوس میں مبتلا بھارتی کرکٹ بورڈ کسی کی سننے کو تیار نہیں ہے۔
سابق بھارتی آل راﺅنڈر راجر بنی کا کہنا ہے کہ ہمارا ورلڈ کپ 2019ءکے لیے سکواڈ تیار ہے لیکن جب میگا ایونٹ شروع ہوگا تو کھلاڑی اتنے زیادہ فریش نہیں ہوں گے جتنا انہیں ہونا چاہیئے ،1983ءکا ورلڈ کپ جیتنے والی بھارتی ٹیم کا حصہ رہنے والے 63سالہ راجر بنی کا کہنا ہے کہ آئی پی ایل ہماری ٹیم کے لیے درد سر بن گیا ہے،ورلڈ کپ سے پہلے آئی پی ایل کھیلنے والے کھلاڑی تھکن کا شکار ہوسکتے ہیں اور اس سے میگا ایونٹ میں ان کی کارکردگی پر فرق آسکتا ہے۔
چیمپئنز ٹرافی 2017ءکے بعد سے آئی پی ایل 2019ءکے آغاز تک سب سے زیاد ہ ون ڈے میچز کھیلنے والے 10کھلاڑیوں میں سے7بھارتی ہیں اور ان میں تین کھلاڑیوں روہت شرما،مہندرا سنگھ دھونی اور شیکھر دھون نے50سے بھی زیادہ میچز کھیلے ہیں،روہت شرما اور شیکھر دھون نے سب سے زیادہ ٹی ٹونٹی میچز بھی کھیلے ہیں،ویرات کوہلی اور جسپریت بمراہ گاہے بگاہے آرام کرتے رہے ہیں اور ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائر ہونے والے مہندرا سنگھ دھونی کو پریکٹس کے لیے اب صر ف وائٹ بال کرکٹ ہی ملتی ہے۔راجر بنی کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان اور نیو زی لینڈ کے کھلاڑیوں کو آرام کے کئی مواقع ملتے ہیں ،ہمیں بھی ایسا ہی شیڈول بنانے کی ضرورت ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں