77

ذوالفقار علی بھٹو کس شخصیت کو ’ڈیڈی‘ کہہ کر پکارتے؟

ڈپٹی سپیکر کی زیر صدارت آج قومی اسمبلی کا اجلاس ہوا جس دوران حکومت اور اپوزیشن کے درمیان خوب ہنگامہ آرائی اور شور شرابا ہوا تاہم وفاقی وزیر توانائی نے ذوالفقار علی بھٹو کے بارے میں ایسی بات کہہ دی کہ پیپلز پارٹی ایوان سے واک آوٹ ہی کر گئی ۔

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی کے اجلاس میں وزیراعظم عمران خان کے دورہ ایران کے موقع پر جرمنی اور جاپان سے متعلق دیے جانے والے بیان کی بھی باز گشت سنائی دی جبکہ دوسری جانب بلاول بھٹونے بھی وزیراعظم عمران خان کو ٹویٹر پر سخت تنقید کا نشانہ بنایا جو کہ تحریک انصاف کے اراکین کو ناگوار گزرا تاہم بات یہاں ختم نہیں ہوئی بلکہ پیپلز پارٹی کے چیئرمین نے قومی اسمبلی سے خطاب میں بھی تحریک انصاف اور وزیراعظم پر تنقید کے تیر چلائے ۔

پاکستان تحریک انصاف کے وزیر توانائی عمر ایوب تقریر کرنے کیلئے کھڑے ہوئے اور کہا کہ ” ذوالفقار علی بھٹو ایوب خان کو ڈیڈی کہتے تھے ، جو ہمارے وزیراعظم کا احترام نہیں کرے گا اسے ایوان میں بات کرنے کی اجازت نہیں دیں گے ۔“عمر ایوب کی جانب سے یہ بیان جاری کرنے پر پاکستان پیپلز پارٹی نے سخت احتجاج شروع کر دیا جبکہ ایجنڈے کی کاپیاں پھاڑتے ہوئے ایوان سے واک آوٹ کر گئے ۔ اس سے قبل مراد سعید تقریر کیلئے کھڑے ہوئے تو اپوزیشن کی جانب سے ” گو بے بی گو “ کے نعرے لگائے گئے اور خوب شور شرابا کیا گیا ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں