79

ورلڈ کپ سکواڈ سے ناخوش سابق کرکٹرز کی سلیکٹرز پر تنقید

عالمی کپ کیلئے پندرہ رکنی قومی سکواڈ کے اعلان پر ناخوش سابق کرکٹرز نے سلیکٹرز اور پی سی بی کو کڑی تنقید کا نشانہ بنا ڈالا۔سابق لیگ سپنر عبدالقادر نے ٹیم کے اعلان کے بعد اپنے ردعمل میں واضح کیا کہ ٹی ٹونٹی میں پرفارم کرنے والوں کو ون ڈے میں کارکردگی دکھانے والوں پر فوقیت دینا سمجھ سے بالاتر ہے کیونکہ پی سی بی کو ٹی ٹونٹی فارمیٹ سے پلیئرز کا چناو کرنا ہے تو پاکستان کرکٹ کپ کو ختم کردیا جائے۔

ان کا کہنا تھا کہ وہاب ریاض نے پاکستان کپ میں شاندار کارکردگی پیش کی لیکن ان کو سکواڈ میں شامل نہیں کیا گیا جبکہ پی ایس ایل اور پاکستان کپ میں عمر اکمل کی کارکردگی بھی ضائع گئی۔ان کا کہنا تھا کہ جس طرح چیئرمین پی سی بی احسان مانی اپنی مرضی کر رہے ہیں اسی طرح انضمام الحق بھی اپنی مرضی کی ٹیم تشکیل دے رہے ہیں۔

سابق کرکٹر سلیم ملک نے محمد عامر کو انگلینڈ کی وکٹوں کا بہترین اور تجربہ کار باﺅلر قرار دیتے ہوئے کہا کہ محمد عامر انگلینڈ میں اچھا پرفارم کرتے رہے ہیں جہاں کنڈیشنز کے اعتبار سے وہ خطرناک ثابت ہوں گے لیکن ان کی جگہ ایک ناتجربہ کار باﺅلر محمد حسنین کو منتخب کرنا انصاف نہیں جب کہ عماد وسیم اور محمد حفیظ بھی مکمل فٹ نہ ہونے کے باوجود قابل غور سمجھے گئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں