74

وزیراعظم نے کب اسدعمر سے پہلی مرتبہ مستعفی ہونے کا کہا؟

سابق وزیرخزانہ اسد عمر نے بطوروزیرخزانہ استعفے کا اعلان کردیا اور کابینہ کا حصہ بننے سے بھی معذرت کرلی جس کے بعد پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے اسد عمر نے انکشاف کیا کہ وزیراعظم نے پہلی مرتبہ کل رات کو میرے ساتھ وزارت سے متعلق بات کی ، کابینہ میں ہونیوالی باقی تبدیلیوں کابھی آج رات یا کل تک اعلان ہوجائے گا۔

پریس کانفرنس سے خطاب میں اسدعمر کاکہناتھاکہ میں وزارت کے لیے تحریک انصاف کیساتھ نہیں تھا، آج بھی اس کیساتھ ہوں ، جب کارپوریٹ سیکٹر چھوڑا تو تحریک انصاف اقتدار میں نہیں تھی، میں آج بھی تحریک انصاف کیساتھ ہوں اور اسے خیرباد نہیں کہہ رہا، مجھے آج بھی یقین ہے کہ عمران خان نیا پاکستان بنائیں گے۔

ایک سوال کے جواب میں انہوں نے بتایاکہ میرے ساتھ وزارت سے متعلق پہلی مرتبہ کل رات کو بات ہوئی ہے ، آج رات یا کل باقی تبدیلیوں کا بھی اعلان ہوجائے گا۔تحریک انصاف کے اندر ہی کسی سازش کے بارے میں سوال کا جواب دیتے ہوئے ان کاکہناتھاکہ ساز ش کا پتہ نہیں لیکن اپنے کپتان سے اجازت لے لی ہے ، اس کا ایمنسٹی سکیم سے کوئی تعلق نہیں ، کچھ ایسے کام کیے جن کے اچھے نتائج نکلے اور کچھ کے نہیں، وزیراعظم کا خیال ہے کہ تبدیلی سے بہتر نتائج نکل سکتے ہیں، نیا وزیرخزانہ بھی مشکل وقت میں قلمدان سنبھالے گا اور اس سے بھی تین ماہ میں دود ھ کی نہریں بہنے کی امید نہ رکھیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں