59

چیف جسٹس کا فیسوں میں اضافے سے متعلق کیس میں استفسار

نجی سکولز کی فیسوں میں اضافے سے متعلق کیس میں چیف جسٹس پاکستان نے ریمارکس دیئے ہیں کہ 5 فیصد اضافہ مناسب ہے، یہ تعین کس بنیاد پر ہوا؟

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں نجی سکولز کی فیسوں میں اضافے سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی،چیف جسٹس کی سربراہی میں 3 رکنی بنچ نے کیس کی سماعت کی،وکیل فیصل صدیقی نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ سندھ ہائیکورٹ کے لارجربنچ نے والدین کے حق میں فیصلہ دیا، ہائیکورٹ نے مجازاتھارٹی کی منظوری کے بغیرفیس میں اضافہ غیرقانونی قراردیا،ہائیکورٹ نے فیصلے میں سالانہ 5 فیصد اضافے کی اجازت دی ۔

وکیل والدین نے کہا کہ فیس میں سالانہ 5 فیصد اضافہ مناسب ہے، چیف جسٹس پاکستان نے استفسار کیا کہ 5 فیصد اضافہ مناسب ہے، یہ تعین کس بنیاد پر ہوا؟وکیل والدین نے کہا کہ مجاز اتھارٹی کے رولز میں 5 فیصد اضافہ مناسب قرار دیا گیا، فیصل صدیقی نے کہا کہ ہائیکورٹ نے سالانہ 5 فیصد اضافے کی حد مقرر کی،ہائیکورٹ نے قراردیا کہ نجی کاروبار پرحکومت مناسب پابندیاں لگاسکتی ہے، عدالتی فیصلے موجود ہیں جس میں تعلیم کو کاروبار قرار دیا گیا،بھارتی عدالتوں نے تعلیم کو کاروبار نہیں پیشہ قرار دیا، چیف جسٹس پاکستان نے استفسار کیاکہ کیا نجی کاروبار میں بنیادی حقوق کا نفاذ کیا جاسکتا ہے؟

اپنا تبصرہ بھیجیں