61

شاہ محمود قریشی سے کوئی اختلافات نہیں، جہانگیرترین

پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی رہنماء جہانگیرترین نے کہا ہے کہ شاہ محمود قریشی سے کوئی اختلافات نہیں، اختلافات سے متعلق گھر کی باتیں گھر میں ہی کریں گے، تمام مسائل کا حل ایک سال میں ممکن نہیں ہے۔ انہوں نے آج یہاں میڈیا سے گفتگو میں بتایا کہ حکومت پاکستان کی بہتری کیلئے کام کررہی ہے۔مسائل بتدریج حل ہوں گے ہمارے پاس جادو کی چھڑی نہیں ہے۔

تمام مسائل کا حل ایک سال میں ممکن نہیں ہے۔جلد عوام کے تمام مسائل کو حل کریں گے، قرضے بھی اتریں گے اور مہنگائی کو بھی کم کریں گے۔معاشی حالات میں بہتری اور عوام کو ریلیف دینے کیلئے کام کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ملتان کو میٹروپولیٹن کارپوریشن میں شامل کرلیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سابقہ حکومتوں نے زراعت کے شعبے پر توجہ نہیں دی۔
ہماری حکومت کپاس کی ادویات کی مناسب قیمتوں پر فراہمی ممکن بنائے گی۔

انہوں نے کہا کہ گندم کی برآمدات کیلئے پاک افغان طورخم بارڈر4 گھنٹے کیلئے اضافی کھول دیا ہے۔ جہانگیرترین نے کہا کہ شاہ محمود قریشی سے اختلافات نہیں۔گھر کی باتیں گھر میں ہی کریں گے۔گھر کی باتیں میڈیا میں نہیں کروں گا۔انہوں نے حیرانگی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ لاہور ہائیکورٹ سے سب کو ریلیف مل رہا ہے جو حیران کن بات ہے۔ دوسری جانب تحریک انصاف نے وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا جہانگیرترین سے متعلق اعتراض مسترد کر دیا گیا ، جہانگیر خان ترین نے لاہور میں وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت ہونے والے اجلاسوں میں شرکت کی۔

شاہ محمود قریشی نے گزشتہ دنوں لاہور میں پریس کانفرنس کے دوران سپریم کورٹ کی جانب سے نا اہل قرار دئیے جانے کیوجہ سے جہانگیر ترین کی سرکاری اجلاسوں میں شرکت پر اعتراض اٹھایا تھا ۔ جہانگیر خان ترین نے گزشتہ روز نہ صرف وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت ایوان وزیر اعلیٰ میں ہونے والے اجلاسوں میں شریک تھے جبکہ انہوں نے وزیر اعظم عمران خان کو رخصت بھی کیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں