64

بھارت نے پاکستان کا کوئی طیارہ نہیں گرایا

ایک معروف بھارتی تجزیہ کار اشوک سوین نے بھارتی فضائیہ کے دعوے کا مذاق اڑایا ہے اور کہا ہے کہ بھارتی فضائیہ مودی کی ترجمان نہ بنے۔ بھارتی فضائیہ کو مودی کی الیکشن مہم کے لیے تذلیل سے گزارا جا رہا ہے، بھارتی فضائیہ کو یاد رکھنا چاہیے کہ مودی چلا جائے گا مگر بھارت کو یہیں رہنا ہے۔

بھارتی ٹی وی کے مطابق اشوک سوین نے کہا کہ بھارتی فضائیہ کہتی ہے کہ اس کے پاس مزید باوثوق شہادت آ گئی ہے کہ پاکستانی طیارہ تباہ ہوا، تو پھر وہ پاکستانی طیارہ دکھا کیوں نہیں رہی۔
اس کا مطلب یہ ہے کہ اب تک جو ثبوت دکھائے گئے وہ مستند نہیں۔انھوں نے کہا کہ بھارتی فضائیہ کو مودی کی الیکشن مہم کے لیے تذلیل سے گزارا جا رہا ہے، بھارتی فضائیہ کو یاد رکھنا چاہیے کہ مودی چلا جائے گا مگر بھارت کو یہیں رہنا ہے۔

واضح رہے بھارتی فضائیہ نے پاک فضائیہکا ایف سولہ طیارہ تباہ کرنے کا نام نہاد ثبوت پیش کیا تھا۔

بھارتی فضائیہ کے ائیر وائس مارشل آر جی کے کپور نے پریس کانفرنس کے دوران ریڈار کی تصاویر دکھا دیں اور کہا کہ یہ تصاویر 27 فروری کو پاک فضائیہ کے ساتھ ہونے والی ڈاگ فائٹ کے ناقابل تردید ثبوت ہیں۔ پریس کانفرنس کے دوران انہوں نے کہا کہ بھارتی فضائیہ سکیورٹی وجوہات کی بنا پر عوام کے ساتھ زیادہ تفصیلات شئیر نہیں کر سکتی البتہ کچھ ریڈار کی تصاویر کو بطور ثبوت پیش کر دیا گیا ہے۔

اپنی پریس کانفرنس میں بھارتی فضائیہ کے افسر نے وہی پُرانا راگ ہی الاپا کہ بھارتیفضائیہ کے مگ 21 طیارے نے پاک فضائیہ کا ایف سولہ طیارہ تباہ کیا۔ یہ پریس کانفرنس امریکی اخبار کی ایک رپورٹ کے بعد کی گئی جس میں کہا گیا تھا کہ پاکستان کے پاس ایف سولہ طیاروں کی تعداد پوری ہے اور یہ کہ پاکستان نےبھارتی فضائیہ کے تباہ کیے گئے مگ 21 طیارے کا ملبہ بطور ثبوت پیش کر دیا .

اپنا تبصرہ بھیجیں