69

حمزہ شہباز نے 85 ارب کی کرپشن کی ہے: شہزاد اکبر

پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر حمزہ شہبازشریف پر آمدن سے زائد اثاثوں اور منی لانڈرنگ کے الزامات ہیں اور اس سلسلے میں نیب ان کی گرفتاری کیلئے کوشاں لیکن اب اس پر وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے احتساب شہزاد اکبر کا انتہائی حیران کن موقف سامنے آگیا۔

جیونیوز کے پروگرام آج شاہزیب خانزادہ کیساتھ میں وہ گفتگو کررہے تھے ۔ نوازشریف کے تین سو ارب روپے جو اب نہیں بتائے جارہے ، نئی رقم 85ارب روپے ہے ، یہ آپ کنفرم کررہے ہیں کہ منی لانڈرنگ 85ارب روپے کی ہوئی ہے؟ اس سوال کے جواب میں مرزا شہزاد اکبر نے بتایا کہ ذاتی طورپر ایف ایم یو کی کوئی چیز نہیں دیکھی ، ایف ایم یو متعلقہ ادارے کو چیزیں دیتا ہے ، انفارمیشن ایسٹس تک نہیں جاتی۔ یہ انفارمیشن صرف کیش ٹرانزکشن جو بینکنگ یا نان بینکنگ چینل سے آئے یا کوئی بینکنگ ٹرانزیکشن ہوتی ہے۔ سس کے آگے کا جو معاملہ ہے وہ نیب نے دیکھنا ہے۔

نیب کی پریس ریلیز میں ذکر نہ ہونے اور حکومتی عہدیداران کی طرف سے 85 ارب روپے کی منی لانڈرنگ کے دعووں اور پھر گٹھ جوڑ کے الزامات لگنے سے متعلق سوال پر مرزا شہزاد اکبر نے بتایا کہ ’فواد صاحب جو بات کرتے ہیں وہ کریں گے، مجھے بھی ذرائع سے بہت ساری چیزیں آئیں، آج میسجز آئے جس میں 85بلین کا ذکر تھا کہ اس سے زائد کے اثاثے ہیں، اردو اور انگریزی دونوں میں وہ چیزیں آرہی ہیں، اماﺅنٹ کی کنفرمیشن نیب کو کرنی چاہیے، کیونکہ نیب کا کیس ہے، میں کوئی اماﺅنٹ کنفرم نہیں کررہا میں صرف پریکٹس کنفرم کررہا ہوں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں