64

تھر میں بجلی کا مسئلہ ہم حل کریں گے:سید مراد علی شاہ

وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ ہمیں خان صاحب سے کنٹینر چاہیئے نہ ہی کھانا، 162ارب جو وزیراعظم ہمیں دینے کا اعلان کرچکے ہیں وہ آپ کو دونگا ، اسد عمر آئی ایم ایف سے مذاکرات کے لیے جا رہے ہیں، تھر کی بجلی کے لیے ہم ایک ارب خرچ کر چکے ہیں، بجلی نیشنل گرڈ میں جا رہی ہے ، ہم تھر کی بجلی کا مسئلہ حل کریں گے ، بے نظیر کا وژن تھا تھر کول سے بجلی بنائی جائے، سندھ کے بجلی، گیس اور دیگر وسائل پر ڈاکہ ڈالا جا رہا ہے، ہمیں اپنی نئی نسل کو بھٹائی کے پیغام کو سمجھانا ہے، بچے چاہے کوئی زبان بولتے ہوں ان کو بھٹائی پڑھنا چاہیئے۔

شاہ عبدالطیف بھٹائی قومی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا کہ ادب والے ذرا دیر سے اٹھتے ہیں اس لیے آج دوست دیر سے پہنچے ہیں،ہم ادب سے دور والے وقت پر پہنچ گئے ہیں،ہمیں اپنی زبان، ادب، ثقافت اور کلچر پر بھرپور کام کرنے کی ضرورت ہے، مجھے اپنے والد جب سکول چھوڑنے جاتے تھے تو شاہ لطیف کے اشعار سناتے جاتے تھے، بھٹائی میری روح میں بسا ہوا ہے لیکن انکے رسالے کا مطالعہ صحیح طریقے سے نہیں کرسکا، حمید آخوند نے مجھے بھٹائی کے رسالے کی تعلیم دینے کا وعدہ کیا تھا لیکن بعد میں اپنے واعدے پر نہیں اترے۔

مراد علی شاہ نے کہا کہ اس کانفرنس کے ذریعے ہمیں شاہ لطیف کے پیغام کو سمجھنا اور اس پر عمل کرنا ہے، ہمیں اپنی نئے نسل کو بھٹائی کے پیغام کو سمجھانا ہے، اسی طریقہ سے اپنی ثقافت، زبان اور ادب کو سنبھال سکیں گے،ہمیں اپنے بچے چاہیں وہ جو بھی زبان بولتے ہوں انکو بھٹائی پڑھنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ میں سراج انسٹیٹیوٹ کو فنڈ دونگا تاکہ اچھا کام کرسکے۔وزیراعلیٰ سندھ نے وفاقی حکومت پر مزاحیہ طنزکرتے ہوئے کہا کہ 162 ارب جو وزیراعظم ہمیں دینے کا اعلان کرچکے ہیں وہ آپ کو دونگا۔انہوں نے کہا کہ ہمیں خان صاحب سے کنٹینر چاہیئے نہ ہی کھانا، تھر کی بجلی کے لیے ہم ایک ارب خرچ کر چکے ہیں، بجلی نیشنل گرڈ میں جا رہی ہے، ہم تھر کی بجلی کا مسئلہ حل کریں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں