62

لاہور ہائیکورٹ نے حمزہ شہباز کو گرفتار کرنے سے روک دیا

لاہور ہائیکورٹ نے پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنماءاور پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز شریف کی حفاظتی ضمانت منظور کرتے ہوئے انہیں 8 اپریل تک گرفتار کرنے سے روک دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق نیب کی ٹیم آج دوبارہ حمزہ شہباز شریف کو گرفتار کرنے پہنچی جو صبح سے ہی ان کے گھر کے باہر موجود ہے۔ حمزہ شہباز شریف نے لاہور ہائیکورٹ نے ناصرف نیب کے وارنٹ گرفتاری چیلنج کئے بلکہ عبوری ضمانت کی درخواست بھی دائر کی جسے پیر کے روز سماعت کیلئے مقرر کیا گیا۔ تاہم حمزہ شہباز شریف کے وکیل ایڈووکیٹ امجد پرویز نے لاہور ہائیکورٹ کے چیف جسٹس سے ان کے چیمبر میں ملاقات کر کے درخواست پر آج ہی سماعت کرنے کی استدعا کی۔

لاہور ہائیکورٹ کے چیف جسٹس سردار شمیم خان نے تمام ریکارڈ طلب کرتے ہوئے فوری طور پر حمزہ شہباز شریف کو گرفتار کرنے سے روک دیا ہے اور حفاظتی ضمانت منظور کرتے ہوئے درخواست کی سماعت کیلئے 2 رکنی بینچ بھی تشکیل دیدیا ہے جو پیر کے روز سماعت کرے گا اور اس کیساتھ ہی حمزہ شہباز شریف کو بینچ کے روبرو پیش ہونے کے احکامات بھی دئیے گئے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں