81

سندھ اسمبلی پر حملہ افسوسناک، 18 ویں ترمیم پر کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے: بلاول بھٹو زرداری

پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ سندھ اسمبلی پرافسوس ناک حملہ کیاگیا ہے، سپیکر سندھ اسمبلی پیپلز پارٹی کا عہدہ نہیں ہے، نیب کا قانون کالا قانون ہے، اس کو تبدیل نہ کرنا ہماری ناکامی ہے، پیپلز پارٹی 18 ویں ترمیم پر کوئی سمجھوتہ نہیں کرے گی۔

تفصیلات کے مطابق سپیکر سندھ اسمبلی سے ملاقات اور پارلیمانی پارٹی کے اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بلاول بھٹو نے کہا کہ سندھ اسمبلی پہلی اسمبلی ہے جس نے پاکستان کی قرارداد منظور کی، اس وقت کی اسمبلی میں بھی آغا سراج درانی کے رشتے دار تھے۔انہوں نے کہا کہ مشرف کے بنائے گئے ادارے نے سپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج درانی کوبغیر کسی ثبوت اسلام آباد سے گرفتار کیا اور گرفتاری کے بعد ثبوت تلاش کئے جارہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ جس طرح عورتوں اور بچوں کو یرغمال بنایا گیا اس کی مذمت کرتے ہیں،کسی بھی جمہوریت اور معاشرے میں ایسا نہیں ہوتا۔ نیب کو سیاسی انجینئرنگ کیلئے استعمال نہ کیا جائے ، نیب کا قانون کالا قانون ہے بے نظیر شہید نے کہا تھا یہ قانون ختم کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جس طرح چادر اورچار دیواری کو پامال کیا گیا اس کی مذمت کرتے ہیں۔

بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال اپنے افسران کے بارے میں تحقیقات کریں، اگر وہ ایکشن نہیں لیتے تو ہم مجبوراً تحقیقات کریں گے۔جے آئی ٹی میں ایجنسی کا نمائندہ بیٹھا کر قانون کی کھلی خلاف ورزی کی گئی، چھ ماہ سے میری کردار کشی کی جا رہی ہے، کسی عدالت نے ہمیں نوٹس نہیں دیا اور سزا دیدی گئی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں