71

پاک آرمی دنیا کی 13 ویں مضبوط ترین فوج قرار

پاکستان آرمی کو دنیا کی 13 ویں مضبوط ترین فوج قرار دیا گیا ہے۔ گلوبل فائر پاور نامی ویب سائیٹ کی جانب سے کئے گئے تازہ ترین سروے میں 133 ممالک کی افواج اور عسکری طاقت کا جائزہ لیا گیا۔ ویب سائٹ نے اپنے سروے میں تمام ممالک کی عسکری طاقت ، اسلحے کی مقدار ، وسائل اور جغرافیائی حالات کے پیش نظر ان کے استعمال کو بنیاد بنایا ہے ۔

اس کے علاوہ تمام افواج کی انفرادی اور اجتماعی قوت کا بھی جائزہ لیا گیا ہے ۔ ویب سائٹ ترجمان کا کہنا ہے کہ درجہ بندی میں ان ممالک کو رینکنگ محض ان کے ہتھیاروں کی تعداد کی بنیاد پر نہیں دی گئی کہ جس ملک کے پاس ہتھیاروں کی تعداد سب سے زیادہ ہے اس کو درجہ بندی میں بہتر قرار دیا جائے بلکہ درجہ بندی میں ان ہتھیاروں کے استعمال اور تکنیک کو بھی مدنظر رکھا گیا ہے ۔

ان کا کہنا ہے کہ موجودہ دور میں دنیا کے کئی ممالک کے درمیان تنائو کی کیفیت بڑھ رہی ہے اور وہ روائتی ہتھیاروں کے ساتھ ساتھ نیوکلیائی ہتھیاروں کو بھی استعمال کرنے پر غور کر رہے ہیں ۔ پاکستانی فوج کو زمین ، فضا اور پانی میں بہتری عسکری صلاحیتوں کے مظاہرے کے بعد یہ درجہ بندی دی گئی ہے ۔ 2017 کی درجہ بندی کے دوران پاکستان کو 0٫3287٫0٫000 کا سکور ملا جو رینکنگ میں بہترین سکور مانا جاتا ہے ۔

ویب سائیٹ کے ترجمان نے بتایا کہ اس وقت پاکستانی فوج کے پاس 9 لاکھ 19 ہزار فوجی ہیں، ان میں سے 6 لاکھ 37 ہزار ڈیوٹی پر تعینات رہتے ہیں۔ پاکستان میں ساڑھے 9 کروڑ افراد بالکل صحتمند اور توانا ہیں جب میں سے 7 کروڑ 53 لاکھ 25 ہزار افراد فوج میں ملازمت حاصل کرنے کیلئے جسمانی اعتبار سے بالکل فٹ ہیں۔

پاکستان کے روائتی حریف بھارت کی آرمی کو اس فہرست میں چوتھے نمبر پر رکھا گیا ہے۔ بھارتی فوج کے پاس 42 لاکھ سے زائد مسلح افواج موجود ہیں جبکہ دنیا کی سب سے مضبوط اور طاقتور بری فوج کا اعزاز حاصل ہے۔ اس کے پاس 13 ہزار 762 جنگی طیارے موجود ہیں جس میں سے 6065 ہیلی کاپٹرز ہیں ۔ دوسرے نمبر پر روس اور تیسرے نمبر پر چین کی افواج کا نمبر آتا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں