96

نجی ٹی وی چینلز کی نشریات معطل: سوشل میڈیا سائٹس بند

پاکستان الیکٹرانک میڈیا کے نگران ادارے (پیمرا) کی طرف سے ہدایات جاری ہونے کے بعد تمام نجی چینلز کی نشریات معطل کر دی گئیں۔

ہفتہ کی صبح ہی سے اسلام آباد اور راولپنڈی کے سنگم پر واقع فیض آباد میں مذہبی جماعت کے کارکنوں کے دھرنے کے خلاف پولیس کی کارروائی کی براہ راست نشریات تمام نجی ٹی وی چینلز پر دکھائی جا رہی تھیں۔

لیکن دوپہر کے بعد پیمرا کی طرف سے ایک نوٹیفیکشن جاری کرتے ہوئے کہا گیا کہ تمام نجی ٹی وی چینلز قواعدوضوابط کی پاسداری کریں اور صورتحال کی حساسیت کو مدنظر رکھتے ہوئے آپریشن کی براہ راست کوریج دکھانے سے گریز کریں۔

اس نوٹیفیکیشن کے کچھ ہی دیر بعد وفاقی دارالحکومت اسلام آباد سمیت ملک کے تقریباً تمام چھوٹے بڑے شہروں میں نجی ٹی وی چینلز کی نشریات معطل ہو گئیں اور صرف سرکاری ٹی وی ہی نشریات پیش کرتا رہا۔

خیال رہے کہ پیمرا قوانین کی شق آٹھ (آٹھ) کے مطابق: ‘قانون نافذ کرنے والے اداروں کی جانب سے کسی بھی جاری آپریشن کی براہ راست کوریج کرنے کی ممانعت ہے اور وہ اپنے چینلز پر صرف وہی معلومات نشر کر سکتے ہیں جس کی اجازت آپریشن کرنے والے ادارے کے انچارج نے دی ہو۔’

پیمرا نے اپنے نوٹیفیکشن میں مزید کہا کہ ٹی وی چینلز اپنے عملے کی حفاظت کے اقدامات کریں اور انھیں کسی قسم کے خطرے میں نہ ڈالیں۔ ’

دوسری جانب پیمرا کی جانب سے تمام نیوز چینلز کو آف ایئر کرنے کے حکم کے بعد ملک بھر میں فیس بک، ٹویٹر اور یوٹیوب کو بھی انٹرنیٹ براؤزر پر بند کردیا گیا۔

ملک بھر میں سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس بک، ٹوئٹر اور یوٹیوب کو انٹرنیٹ براؤزر پر بند کردیا گیا ہے۔انٹرنیٹ صارفین موبائل ایپلی کیشنز کےذریعے فیس بک، ٹویٹر اور یوٹیوب تک رسائی حاصل کرسکتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں