89

شریف خاندان کے خلاف نیب ریفرنس کی سماعت 7 نومبر تک ملتوی

نوازشریف کے خلاف نیب ریفرنس کی سماعت منگل سات نومبر تک ملتوی کر دی گئی۔

آج 3 نومبر کو جب اسلام آباد کی احتساب عدالت میں ریفرنسز کی سماعت کا آغاز ہوا تو نواز شریف کے وکیل خواجہ حارث نے عدالت کو بتایا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ نے تینوں ریفرنسز یکجا کرنے سے متعلق حکم پر نظر ثانی کی ہدایت کی ہے۔

جس پر احتساب عدالت نے کہا کہ انہیں کچھ ہی دیر میں ہائی کورٹ کے حکم کی کاپی موصول ہونے والی ہے جس کے بعد سماعت کچھ دیر کیے لیے ملتوی کردی گئی۔

تاہم بعد ازاں شریف خاندان کے وکیل نے عدالت سے استدعا کی کہ سماعت کے لیے آئندہ کی تاریخ دے دی جائے کیونکہ ہائی کورٹ کے حکم نامے کی کاپی آنے میں وقت درکار ہے اور ’نہ ہی عدالت اور نہ ہی ان کے موکل کے پاس اتنا وقت ہے‘۔

جس کے بعد احتساب عدالت نے سابق وزیراعظم نواز شریف، ان کی صاحبزادی مریم نواز اور داماد کیپٹن (ر) محمد صفدر کے خلاف دائر ریفرنسز کی سماعت 7 نومبر 2017 تک کے لیے ملتوی کردی۔

احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے ریمارکس دیئے کہ ہائیکورٹ کا تفصیلی فیصلہ آنےتک دلائل نہیں سن سکتے۔ اس کے علاوہ احتساب عدالت نے تفصیلی فیصلہ آنےتک گواہوں کو جاری سمن بھی معطل کر دیئے۔

عدالت نے کہا کہ آئندہ سماعت پر دونوں درخواستوں پر سماعت ہو گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں