69

لاہور:چیف جسٹس آف پاکستان میاں ثاقب نثارکاویمن ججز کانفرنس سے خطاب

چیف جسٹس نے اپنے خطاب کے دوران کہاآئین خواتین کےتحفظ کاضامن ہے

‏کسی کواس کےبنیادی حقوق چیف سےمحروم نہیں کیاجاسکتاآئین کےبنیادی حقوق تمام شہریوں کےلیےیکساں ہیں

‏عدلیہ میں خواتین ججزکوتمام اختیارات حاصل ہیں خواتین ججز باصلاحیت ہیں قانون کوسیکھیں اوراس پرعمل کریں

ہرکسی کو انصاف کی فراہمی یقینی بنائیں کیسز کا فیصلہ میرٹ پراور شفاف کریں انصاف کی بروقت فراہمی کویقینی بنائیں ‏انصاف کی فراہمی اورسسٹم کوبہتربنانےکےلیےتجاویزدیں

ملک میں قانون کی حکمرانی چاہتےہیں ‏آئین میں بنیادی حقوق کےحوالےسےکوئی صنفی امتیازنہیں ‏کوئی بھی جج قانونی تقاضےپورےکیےبغیرفیصلہ نہیں دےسکتا

‏اعتراف کرتاہوں کہ کیسزکونمٹانےکےلئےجورفتارچاہئےوہ نہیں ہے

ماڈل کورٹس کا آئیڈیا شاندار ہے‏لیکن جب تک انصاف کاعمل تیزنہیں ہوگاان کاکوئی فائدہ نہیں ‏انصاف کی فراہمی کےدوران فیصلےابہام سےپاک ہونےچاہئیں

اپنا تبصرہ بھیجیں