33

حسد کاکوئی علاج نہیں، اعزازچوہدری

اسلام آباد(30اگست 2017)امریکا میں پاکستانی سفیر اعزاز چوہدری نے سابق ہائی کمشنر عبد الباسط کے خط پر جواب دیتے ہوئے کہاہے کہ عبدالباسط ریٹائر ہو چکے لیکن حسد کاکوئی علاج نہیں۔

امریکا میں پاکستانی سفیراعزازچودہری نے بھارت میں سابق ہائی کمشنرعبدالباسط کے خط پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ عبدالباسط کی غلط فہمی ہے کہ وہ میری وجہ سے سیکرٹری خارجہ نہ بن سکے، عبدالباسط ریٹائر ہو چکے مگر حسد کا کوئی علاج نہیں، میں نے اپنی بہترین صلاحیتوں سے ملک کی خدمت کی جب کہ میں نے چار قل اورسورة فلک پڑھ کر ان کا خط نظر اندازکردیا۔

اعزاز چوہدری نے کہا کہ عبدالباسط سمجھنے میں ناکام رہے کہ زندگی کوشش اورقسمت کے ملاپ کا نام ہے، دوسرے پرکیچڑ اچھالنے سے کوئی فائدہ نہیں ہو سکتا، زندگی نے جو ہمیں دیا اسے عاجزی سے قبول کر لینا چاہیے اور کئی ساتھیوں نے عبدالباسط کے ناروا رویہ کے خلاف اظہار افسوس کیا۔

اعزازچودہری نے مزید کہا کہ عبدالباسط کا خط بدترین اورغیر واضح ہے، عبدالباسط نے اب سوشل میڈیا کا سہارا لیا اس لئے خیالات سے آگاہ کرنا پڑا جب کہ میں نے اس خط پر کوئی ردعمل نہ دے کر معاملہ اللہ کے سپرد کردیاتھا۔

واضح رہے کہ گزشتہ روزسابق ہائی کمشنرعبدالباسط کی جانب سے امریکا میں پاکستان کے سفیراعزازچوہدری کو لکھا گیا خط منظرعام پر آیا تھا جس میں انہوں نے اعزاز چوہدری کو ملک کا بدترین سیکرٹری خارجہ قرار دیا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں